لاہور ہائی کورٹ نے سانحہ ماڈل ٹاون کی رپورٹ طلب کر لی،،،

لاہور ہائی کورٹ نے سانحہ ماڈل ٹاون کی رپورٹ طلب کر لی،،،

ویب ڈیسک:ہائی کورٹ نے پنجاب حکومت سے سانحہ ماڈل ٹاؤن کی جوڈیشل انکوائری رپورٹ طلب کرلی ہے۔

 لاہور ہائی کورٹ میں سانحہ ماڈل ٹاؤن کی جوڈیشل انکوائری رپورٹ پبلک کرنے کے فیصلے کے خلاف حکومتی درخواست پر سماعت ہوئی۔ جسٹس عابد عزیز شیخ کی سربراہی میں فل بینچ نے کیس کی سماعت کی۔ حکومت کے وکیل خواجہ حارث نے عدالت میں دلائل دیتے ہوئے کہا کہ انکوائری رپورٹ جوڈیشل ریکارڈ نہیں اور اسے شہادت کے لئے استعمال نہیں کیا جاسکتا۔

خواجہ حارث نے عدالت سے استدعا کی کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن سے متعلق درخواستیں فل بینچ کے پاس زیرسماعت تھیں، اس لیے سنگل بینچ کو درخواستوں پر سماعت کا اختیار نہیں تھا لیکن سنگل بینچ نے حقائق کے برعکس سانحہ ماڈل ٹاؤن رپورٹ پبلک کرنے کا حکم دیا لہذا عدالت سنگل بینچ کے فیصلے کو کالعدم قرار دے۔

ہائی کورٹ نے پنجاب حکومت کو سانحہ ماڈل ٹاؤن کی رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیتے ہوئے کیس کی سماعت ملتوی کردی۔ عدالت نے حکم دیا کہ پنجاب حکومت آئندہ سماعت پر انکوائری رپورٹ پیش کرے اور ہم رپورٹ کا رازداری سے (ان کیمرہ) معائنہ کریں گے۔

متعلقہ خبریں