پانامالیکس مقدمے کے تمام فریقین کو آخری موقع دیتے ہوئے آئندہ سماعت تک دستاویزی ثبوت مانگ لیے ہیں.سپریم کورٹ

پانامالیکس مقدمے کے تمام فریقین کو آخری موقع دیتے ہوئے آئندہ سماعت تک دستاویزی ثبوت مانگ لیے ہیں.سپریم کورٹ

(سید سیف اللہ) سپریم کورٹ آف پاکستان نے پانامالیکس مقدمے کے تمام فریقین کو آخری موقع دیتے ہوئے آئندہ سماعت تک دستاویزی ثبوت مانگ لیے ہیں اور واضح کیاہے کہ کمیشن کی کارروائی کے دوران کسی بھی قسم کا ریکارڈ پیش کرنے کا موقع نہیں دیاجائے گا۔
اپنے تحریری حکم میں سپریم کورٹ نے فریقین کو ہدایت کی کہ اپنے دعوے کے حق میں دستاویزی ثبوت پیش کریں ،فریقین کی باہمی رضامندی سے 15نومبرتک سماعت ملتوی کرتے ہوئے آخری موقع دیاجاتاہے ۔ عدالت نے لکھاکہ کمیشن کی تشکیل سے پہلے عدالت کے لیے بھی ضروری ہے کہ وہ شواہد کا سرسری جائزہ لے ، یہ بھی واضح کیاجاچکاہے کہ اس حکم نامے سے مقررہونیوالے کمیشن کے اختیارات میں کمی نہیں ہوگی ، وہ جب چاہیں کسی بھی ذریعے سے کوئی بھی ریکارڈ مانگ سکتاہے ۔یادرہے کہ تحریک انصاف پر تنقید کی جاتی ہے کہ وہ دستاویزی ثبوت کے بغیر ہی الزام لگادیتے ہیں لیکن چونکہ فیصلوں میں شواہد اور دلائل سے کام لینا ہوتاہے ، اس لیے عدالتی کارروائیوں میں پی ٹی آئی کوماضی میں بھی مشکلات کا سامنا رہا۔

متعلقہ خبریں