فاٹا کو خیبرپختونخوا میں ضم کرنے کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج

فاٹا کو خیبرپختونخوا میں ضم کرنے کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج

ویب ڈیسک:فاٹا اصلاحات کمیٹی کی تجاویز کے تحت قبائلی علاقوں کو خیبرپختون خوا میں ضم کرنے کے فیصلے کو سپریم کورٹ میں چیلنج کردیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق، فاٹا سے تعلق رکھنے والے قبائلی عمائدین نے حکومتی اصلاحات کمیٹی کو مسترد کرتے ہوئے فاٹا کو خیبرپختون خوا میں ضم کرنے کے خلاف درخواست سپریم کورٹ میں جمع کرادی ہے۔درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہےکہ  فاٹا اصلاحات  بناتے وقت فاٹا  کا کوئی نمائںدہ موجود نہیں تھا۔درخواست میں وفاق ، صدر مملکت، وزیراعظم، وزارت سیفران، اور گورنر خیبر پختونخوا کو حریف بنایا گیا ہےدرخواست میں اصلاحات کے تحت فاٹا کو خیبرپختونخوا میں ضم کرنے کو غیر آئینی قرار دیتے ہوئے موقف اختیار کیاہے کہ فاٹا کو خیبرپختونخوا میں ضم کرنا غیر آئینی ہے، جبکہ حکومتی اصلاحات کمیٹی میں ایک شخص کا تعلق بھی فاٹا سے نہیں ہے۔

متعلقہ خبریں