دہشتگردوں کو دیکھتے ہی گولی مارنے کا حکم

دہشتگردوں کو دیکھتے ہی گولی مارنے کا حکم

ویب ڈیسک:ایپکس کمیٹی اجلاس میں پنجاب حکومت نے  دہشتگردوں کے کو دیکھتے ہی گولی مارنے کی منظوری دے دی گئی۔ اجلاس خودکش حملہ آوروں کے سہولت کار '' جیٹ بلیک '' دہشتگرد قرار دیدیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق اجلاس میں دہشتگردوں کو دیکھتے ہی گولی مارنے کے حکم کے ساتھ ساتھ سہولتکاروں کو جیٹ بلیک دہشتگرد قرار دیدیا گیا اور ساتھ ہی ساتھ پولیس اودیگر اداروں کو امن و امان کے قیام کیلئے بھر پور طاقت کے ساتھ اپنا کردار ادا کرنے کی ہدایات کی گئیں-

ایپکس کمیٹی اجلاس میں پنجاب میں کالعدم تنظیموں کے خلاف بھرپور آپریشن کا فیصلہ کیا گیا۔

اجلاس میں طے کیا گیا ہے کہ اگر سی ٹی ڈی اور پنجاب پولیس چاہے گی تو رینجرز کو طلب کیا جاسکے گا اور رینجرز تنہا نہیں بلکہ پہلے سے موجود پولیس اور سی ٹی ڈی کیساتھ مل کر آپریشن کرے گی ۔

اجلاس میں بتایا گیا کہ کالعدم تنظیم الاحرار کو پنجاب سے سپورٹ لشکر جھنگوی کا نیٹ ورک فراہم کر رہا ہے

 قیادت کے مارے جانے کے بعد لشکر جھنگوی کے بھٹکے ہوئے کارندے اب تنظیم الاحرار سے رابطے میں ہیں۔خود کش حملہ آوروں کے سہولت کاروں کو بھی "جیٹ بلیک" دہشت گرد سمجھا جائیگا اور ان سہولت کاروں کے پورے نیٹ ورک کو توڑا جائیگا اور ان کو رہائش فراہم کرنے سے لیکر پناہ دینے اور اطلاعات پہنچانے والوں کے خلاف بھی گھیرا تنگ کیا جائے گا ۔ اجلاس میں بتایا گیا کہ مکمل منصوبہ بندی کےساتھ دہشتگردوں کے نیٹ ورک کے خاتمے کا آغاز کر دیا گیا ہے اور آنے والے دنوں میں مزید سخت اقدامات کئے جائیں گے ۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ اجلاس کو بتایا گیا کہ گلشن پارک لاہور میں ہونے والا دھماکہ بھی اسی نیٹ ورک نے کیا تھا جس کے اہم ترین کردار اور ماسٹر مائنڈ کو رواں ماہ ہی کیفر کردار تک پہنچایا گیا ہے اور اب مال روڈ لاہور دھماکے کے تانے بانے بھی اسی نیٹ ورک سے جڑے ہیں جس کے بعد بھر پور آپریشن کی منظوری دی گئی ہے ۔

in  progress

متعلقہ خبریں