رد الفساد کے بجائےردالنثار ہوتا تو حالات بہتر ہوتے،مولا بخش چانڈیو

رد الفساد کے بجائےردالنثار ہوتا تو حالات بہتر ہوتے،مولا بخش چانڈیو

ویب ڈیسک:پیپلز پارٹی پارلیمینٹیرین کے مرکزی سیکریٹری اطلاعات مولا بخش چانڈیو نے کہا ہے کہ ردالفساد کی مکمل حمایت کرتے ہیں مگر اس سے پہلے ردالنثار کیا جاتا تو اور بہتر ہوتا۔ 

کراچی میں ایک کتاب کی تقریب رونمائی سے خطاب کرتے ہوئے مولا بخش چانڈیو نے سیاسی مخالفینپر خوب گولے برسائے کہتے ہیں کہ پالیسیاں، نیتیں بہتر ہوتیں تو فیصلے بہتر اور نتائج بھی بہتر ہوتے۔ انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن کو چھوٹے صوبے اچھے نہیں لگتے اور  ان لوگوں کو پنجاب سارا پاکستان نظر آتا ہے۔

مولا بخش چانڈیو کا کہنا تھا کہ جہاں حکمران انتہاپسندوں کے حامی ہوں وہاں دہشت گردی کا خاتمہ ممکن نہیں، ردالنثار ہو جاتا تو ردالفساد کی ضرورت نہ پڑتی۔سندھ حکومت اور سندھ پولیس نے قیام امن کے لئے قربانیاں دی ہیں۔ رینجرز کے کردار کو بھی فراموش نہیں کرسکتے۔

انہوں نے کہا کہ میں نواز لیگ ک کی ساری پالیساں ناکام ہو چکی ہے میاں صاحب سیہون شریف گئے مگر درگاہ پر نہیں گئے۔ شہدا کے لیے کوئی اعلان نہیں کرسکے بس چکر لگا کر چلے گئے۔

متعلقہ خبریں