سرحد ی صورتحال اور آرمی چیف کا دو ٹوک بیان

سرحد ی صورتحال اور آرمی چیف کا دو ٹوک بیان


بری فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے کہ پاک فوج کنٹرول لائن کے قریب رہنے والے شہریوں کی حفاظت ہر قیمت پر یقینی بنائے گی۔ گزشتہ روز کیل سیکٹر میں اگلے مورچوں کا دورہ کرتے ہوئے آرمی چیف نے واضح پیغام دیا ہے کہ پاک فوج کو اپنی ذمہ داریوں کا بھرپور احساس ہے۔ انہوں نے کہا کہ آزاد کشمیر کے عوام مقبوضہ کشمیر میں بھارتی بربریت اور بھارتی ایجنڈے سے بخوبی آگاہ ہیں۔ اس موقع پر پاک فوج کے سربراہ کو لائن آف کنٹرول کی صورتحال اور بھارتی خلاف ورزیوں اور فائرنگ کے واقعات پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔بھارت کی جانب سے کنٹر ول لائن کی خلاف ورزی اب معمول بنتا جا رہا ہے جس کے باعث خطے میں کشیدگی میں اضافہ فطری امرہے۔ بھارت کو سرحدی خلاف ورزی کے وقت اس امر کا ذرا بھی خیال نہیں رہتا کہ وہ ایک ایسے ملک کے ساتھ سرحدی چھیڑ چھاڑ کا مرتکب ہو رہا ہے جو ایک ایٹمی قوت ہے جس کی طاقتور فوج اپنی جگہ پاکستان کے عوام بھی وقت آنے پر وطن عزیز کے دفاع کی ذمہ داری میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیتے آئے ہیں ۔ ایک بڑی وجہ مقبوضہ کشمیر کے حالات سے دنیا کی توجہ ہٹانا اوربھارت کے مسائل کا شکار عوام کے مسائل میں ناکامی کے بعد ان کی توجہ پاکستان دشمنی کی طرف دلا کر اصل مسائل سے ان کی توجہ ہٹا نا ہے ۔ بہتر ہوگا کہ بھارت داخلی صورتحال پر توجہ دے اور سرحدی خلاف ورزیاں کر کے اپنے عوام کے سامنے الٹا پاکستان پر ذمہ داری عائد کر کے ان کی توجہ ہٹانے کی ناکام سعی کے بجائے خودبھی امن سے رہے اور پڑوسیوں کو بھی امن سے رہنے دے اور اپنے داخلی معاملات پر توجہ کے ساتھ عوام کو درپیش مسائل کے حل کی سعی کرے ۔تو نہ صرف ان کے اپنے حق میں بلکہ پورے خطے کے عوام کے حق میں بہتر ہوگا ۔

متعلقہ خبریں