Daily Mashriq

پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ، پیٹرول 2روپے 61 پیسے مہنگا

پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ، پیٹرول 2روپے 61 پیسے مہنگا

حکومت نے عوام کو سال نو کا 'تحفہ' دیتے ہوئے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 3 روپے 10 پیسے تک اضافہ کر دیا۔

وزارت خزانہ کی جانب سے جاری نوٹی فکیشن کے مطابق پیٹرول کی قیمت میں 2 روپے 61 پیسے فی لیٹر اور ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت میں 2 روپے 25 پیسے فی لیٹر اضافہ کیا جارہا ہے۔

اسی طرح مٹی کے تیل کی قیمت میں 3 روپے 10 پیسے اور لائٹ ڈیزل آئل کی قیمت میں 2 روپے 8 پیسے اضافہ کیا گیا ہے۔

قیمتوں میں اضافے کے بعد پیٹرول کی نئی قیمت 116 روپے 60 پیسے اور ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت 127 روپے 26 پیسے ہوگی۔

عوام کو مٹی کا تیل اب 99 روپے 45 فی لیٹر جبکہ لائٹ ڈیزل آئل 84 روپے 51 پیسے فی لیٹر میں دستیاب ہوگا۔

پیٹرولیم مصنوعات کی نئی قیمتیں جنوری 2020 کے لیے نافذالعمل ہوں گی اور ان کا اطلاق رات 12 بجے سے ہوگا۔

واضح رہے کہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں یہ اضافہ اوگرا کی تجویز کے عین مطابق کیا گیا ہے۔

ملک میں اکثر گاڑیاں خاص طور پر مسافر بردار گاڑیاں پیٹرول کو بطور ایندھن استعمال کر رہی ہیں، لہٰذا پیٹرول کی قیمت میں اضافے سے ٹرانسپورٹ کے کرایوں میں اضافہ ہوجائے گا۔

ملک میں کمپریسڈ نیچرل گیس (سی این جی) کی دستیابی میں شدید کمی کے بعد پیٹرول کے بطور ایندھن استعمال میں اضافہ بھی ہوا ہے۔

یہاں یہ بات مدنظر رہے کہ وفاقی ریونیو بورڈ (ایف بی آر) تمام پیٹرولیم مصنوعات پر 17 فیصد جنرل سیلز ٹیکس (جی ایس ٹی) وصول کر رہا ہے، اس کے علاوہ وفاقی حکومت ڈیزل پر 18 روپے فی لیٹر، پیٹرول پر 15 روپے، مٹی کے تیل پر 6 روپے اور لائٹ ڈیزل آئل پر 3 روپے فی لیٹر پیٹرولیم لیوی بھی وصول کررہی ہے۔

ایل پی جی فی کلو 25 روپے مہنگی

دوسری جانب آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) نے مائع پٹرولیم گیس (ایل پی جی) کی قیمت میں 25 روپے فی کلو اضافہ کردیا ہے۔

اوگرا کے نوٹی فکیشن کے مطابق ایل پی جی کے گھریلو سلینڈ کی قیمت ایک ہزار 513 روپے سے بڑھ کر ایک ہزار 791 روپے ہوگئی ہے۔

متعلقہ خبریں