Daily Mashriq

صوبائی حکومت مالی و انتظامی طور پر دیوالیہ ہوچکی، سردار بابک

صوبائی حکومت مالی و انتظامی طور پر دیوالیہ ہوچکی، سردار بابک

مردان( بیورو رپورٹ) اے این پی کے صوبائی جنرل سیکرٹری اور پارلیمانی لیڈر سردار حسین بابک نے کہا ہے کہ ملک میں صدارتی نظام لانے اور اٹھارویں ترمیم کے خاتمے کی سازشیں ہو رہی ہیں صوبائی حکومت مالی اور انتظامی طور پر دیوالیہ ہو چکی ہے اور منظور نظرجونیئر افسروں کو تین تین عہدوں سے نوازا گیا ہے وہ پارٹی کے ضلعی انتخابات کے موقع پر کارکنوں سے خطاب کر رہے تھے ۔ تقریب سے نو منتخب صدر حاجی لطیف الرحمان ،جنرل سیکرٹری ہارون خان ،سابق صدر حمایت اللہ مایار،احمد خان بہادر اور خورشید خٹک نے بھی خطاب کیا۔سردار حسین بابک نے کہا کہ بھارتی جارحیت کیخلاف تمام جماعتیں ایک پیج پر ہیں جنگ کسی مسئلے کا حل نہیں بلکہ اس سے مزید مسائل جنم لیتے ہیں دونوں ممالک کو جنگ سے گریز کرنا چائیے پاکستان کے وزیر اعظم نے امن کیلئے مذاکرات کی دعوت دی ہے بھارت کو اس کا مثبت جواب دینا چایئے اُنہوں نے کہا کہ موجودہ حالات کی آڑ میں پیٹرولیم مصنوعات کے نرخوں میں اضافہ قبول نہیں۔ صوبائی حکومت کو کڑی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے سردار بابک نے کہا کہ مصنوعی اکثریت کی حامل حکومت عوامی مسائل سے بھاگ رہی ہے اور بار بار صوبائی اسمبلی کا اجلاس ملتوی کیا جارہا ہے لیکن ہم انہیں بھاگنے نہیں دینگے اور جلد ہی اسمبلی اجلاس کیلئے ریکوزیشن جمع کرائیں گے۔اُنہوں نے کہا کہ صوبے پر نا اہل لوگ مسلط ہیں اُنہوں نے مطالبہ کہ آرکیالوجی کے ڈائر یکٹر کی گرفتاری کے اصل حقائق عوام کے سامنے لائے جائیں قوم نواردات کی چوری اور ان کی مالیت کے بارے میں بھی جاننا چاہتی ہے اس وقت کرپٹ لوگ عمران خان کی چھتری تلے پناہ لئے ہوئے ہیں۔

متعلقہ خبریں