Daily Mashriq


مشہور ترین مشروب کافی کا عالمی دن

مشہور ترین مشروب کافی کا عالمی دن

ویب ڈیسک:دنیا بھر میں ہر روز ڈیڑھ بلین سے زائد کافی کے کپ پیے جاتے ہیں۔

کافی ایک پسندیدہ اور سب سے زیادہ پیا جانے والا مشروب ہے۔ دنیا بھر میں روزانہ ڈیڑھ بلین سے زائد کافی کے کپ پیے جاتے ہیں۔

دنیا بھر میں آج اس مشروب کے شائقین کافی کا دن منا رہے ہیں۔

بہت کم لوگوں کو علم ہے کہ کافی کا اصل وطن مشرق وسطیٰ کا ملک یمن ہے۔ یمن سے سفر کرتی کافی خلافت عثمانیہ کے دور میں ترکی تک پہنچی، اس کے بعد یورپ جا پہنچی اور آج کافی یورپ کا سب سے زیادہ پیا جانے والا مشروب ہے۔

انسانی جسم کے مختلف اعضاء کیلئے اور بہت سی بیماریوں سے بچاو کیلئے کافی نہایت مفید مشروب ہے مثال کے طور پر ،

1)جگر .

ماہرین کے مطابق روزانہ 3 سے 4 کپ کافی پینے والے افراد میں جگر کے مختلف امراض کا خطرہ 80 فیصد کم ہوجاتا ہے جبکہ ان میں جگر کا کینسر ہونے کے امکانات بھی بے حد کم ہوجاتے ہیں۔

2)دماغ۔

سیاہ کافی انسانی دماغ میں ڈوپامائن نامی مادے کی مقدار میں اضافہ کرتی ہے۔ یہ مادہ دماغ کو جسم کے مختلف حصوں تک سنگلز بھجنے کے لیے مدد فراہم کرتا ہے۔

ڈوپامائن میں اضافے سے پارکنسن جیسی بیماری سے بچا جا سکتا ہے۔ اس بیماری کا شکار افراد کے اعصاب سست ہونے لگتے ہیں اور ان کی چال میں لڑکھڑاہٹ اور ہاتھوں میں تھرتھراہٹ ہونے لگتی ہے،یہی نہیں ڈوپامائن کی زیادتی اور دماغی خلیات کا متحرک ہونا بڑھاپے کے مختلف دماغی امراض جیسے الزائمر اور ڈیمینشیا سے بچاو کا سبب بنتی ہے۔

3)کینسر کے امکان میں کمی

ماہرین کا کہنا ہے کہ روزانہ 3 سے 4 کپ کافی پینے والے افراد میں مختلف اقسام کے کینسر کا خطرہ کم ہوجاتا ہے۔ کافی جگر کے کینسر سمیت آنت اور جلد کے کینسر کے خطرات میں بھی کمی کرتی ہے۔

4)ڈپریشن سے بچاو

طبی ماہرین کافی کو پلیژر کیمیکل یعنی خوشی فراہم کرنے والا مادہ کہتے ہیں۔ چونکہ کافی آپ کے دماغی خلیات کو متحرک اور ڈوپامائن میں اضافہ کرتی ہے لہٰذا آپ کے دماغ سے منفی جذبات پیدا کرنے والے عناصر کم ہوتے ہیں اور آپ کے ڈپریشن اور ذہنی تناؤ میں کمی آتی ہے۔

5)ذہانت میں اضافہ

کافی میں موجود کیفین آپ کے نظام ہضم سے خون میں شامل ہوتی ہے اور اس کے بعد یہ آپ کے دماغ میں پہنچتی ہے۔

وہاں پہنچ کر یہ آپ کے دماغ کے تمام خلیات کو متحرک کرتی ہے نتیجتاً آپ کے موڈ میں تبدیلی آتی ہے اور آپ کی توانائی، ذہنی کارکردگی اور دماغی استعداد میں اضافہ ہوتا ہے۔

5)امراض قلب میں کمی

تحقیق کے مطابق دن میں 2 سے 3 کپ کافی پینا دن میں کچھ وقت چہل قدمی کرنے کے برابر ہے۔ یہ فالج اور امراض قلب کے خطرے میں بھی کمی کرتی ہے۔

4)سر درد سے نجات

کافی میں موجود کیفین خون کی نالیوں کی سوجن کو کم کرتی ہے جس سے سر درد میں کمی واقع ہوتی ہے۔

5)ذیابیطس کے خطرے میں کمی۔

سیاہ کافی ذیابیطس کے خطرے کو بھی کم کرتی ہے۔ لیکن کافی میں کریم اور چینی ملانے سے یہ اچر ختم ہوجاتا ہے۔

متعلقہ خبریں