القاعدہ کے خلاف ڈونلڈ ٹرمپ کے حکم پر پہلی کارروائی

القاعدہ کے خلاف ڈونلڈ ٹرمپ کے حکم پر پہلی کارروائی

ویب ڈیسک:وائٹ ہاؤس کاکہنا ہےکہ یمن کےعلاقےیکلہ میں سوچ سمجھ کرکارروائی کی،جس میں ممکنہ طور پربہت سےشہری بھی ہلاک ہوئے۔

تفصیلات کےمطابق یمن کے یکلہ ڈسٹرکٹ میں القاعدہ کےمضبوط گڑھ پرکیےجانےوالا حملہ بہت سوچ سمجھ کرکیاجانےوالا اقدام تھا،اس حملے میں دس بچوں سمیت23 افراد ہلاک ہوئے تھے۔

وائٹ ہاؤس کے ترجمان شان اسپائسرنےپریس کانفرنس کےدوران اپنےبیان میں کہا کہ یمن میں کارروائی ڈونلڈ ٹرمپ کی اجازت سے کی جانے والی پہلی کارروائی ہے۔  

امریکی فوج کی جانب سے وصول ہونے والی اطلاعات کےمطابق بہت سے اپاچی ہیلی کاپٹروں نےاس آپریشن میں حصہ لیاجس میں تین القاعدہ رہنماؤوں سمیت 14 شدت پسند ہلاک ہوئے۔

ترجمان وائٹ ہاؤس نےکہاکہ جب جانوں کا ضیائع ہواورلوگ زخمی ہوں تواسے مکمل کامیابی کہنا مشکل ہوتا ہے۔مگر میرا خیال ہےکہ یہ ہرطرح سےایک کامیاب آپریشن ہے۔

متعلقہ خبریں