Daily Mashriq

معاشی بدحالی، ماں نے کمسن بیٹی کو سمندر میں پھینک دیا

معاشی بدحالی، ماں نے کمسن بیٹی کو سمندر میں پھینک دیا

کراچی:  گولیمار کی رہائشی خاتون نے حالات سے تنگ آکر کمسن بیٹی کو سی ویو کے قریب سمندر میں پھینک دیا جو تاحال لاپتہ ہے۔

ایس ایچ او تھانہ ساحل سب انسپکٹر غزالہ نے بتایا کہ شکیلہ زوجہ رشید جو کہ گولیمار کی رہائشی ہے جس نے سی ویو کے علاقے ساحل ایونیو نزد فرحان شہید پارک کے قریب سمندر میں جا کر پہلے اپنی ڈھائی سالہ بیٹی انعم کو سمندر میں پھینک دیا جسے سمندر کی لہریں بہا کر اپنے ساتھ لے گئیں جبکہ وہ خود بھی سمندر میں ڈوبنے کی کوشش کر رہی تھی کہ موقع پر موجود افراد نے اسے پکڑ لیا اور فوری طور پر پولیس کو اطلاع دی۔پولیس نے موقع پر پہنچ کر شکیلہ کو حراست میں لیکر تھانے لے آئی ،خاتون کے مطابق معاشی حالات ابتر ہونے کی وجہ سے گزار بسر کرنا بھی محال ہوگیا ہے جبکہ اس کا شوہر لیب ٹیکنیشن ہے، انھوں نے بتایا کہ خاتون کا کہنا ہے کہ اپنوں کے رویے ، تنگدستی اور مالی حالات کی وجہ سے دلبرداشتہ ہو کر اس نے بیٹی سمیت موت کو گلے لگانے کا منصوبہ بنایا تھا۔

غزالہ کے مطابق بچی کو تلاش کرنے کے لیے انھوں نے فوری طور پر غوطہ خوروں کی بھی مدد حاصل کی تاہم کوئی کامیابی حاصل نہیں ہو سکی اور کمسن انعم تاحال لاپتہ ہے ، پولیس نے ملزمہ شکیلہ کے خلاف 302 کی دفعہ کے تحت مقدمہ نمبر  09/19درج کرلیا ہے ۔

متعلقہ خبریں