چارسدہ:اختلافات کے باوجود باچا خان کو ایک لیڈر مانتا ہوں، عمران خان

چارسدہ:اختلافات کے باوجود باچا خان کو ایک لیڈر مانتا ہوں، عمران خان

ویب ڈیسک: جمہوریت میں میرٹ کی بالادستی ہوتی ہے،اختلافات کے باوجود باچاخان کو ایک لیڈر مانتا ہوں ،چیئرمین پی ٹی آئی کا چارسدہ میں جلسے سے خطاب ۔

چیئرمین تحریک انصاف کاچارسدہ میں جلسہ عام سے خطاب کے دوران کہنا تھا کہ جمہوریت میں انتقال اقتدار میرٹ جبکہ بادشاہت میں نسل در نسل اقتدار منتقل کیا جاتا ہے ۔

عمران خان نے کہا کہ صرف ایک بارش سے لاہور میں شہباز شریف کی ترقی کا پول کھل گیا،قائد اعظم نے 40 سال محنت کی جبکہ نوز شریف لیدر نہیں تھے اور انہیں ضیاءالحق نے لیڈر بنایا۔

کپتان نے مزید کہا کہ ضروری نہیں کہ اچھے لیڈر کی اولاد بھی اچھی لیڈر ہو،بلاول بھٹو اور مریم نواز بغیر محنت کے وزارت عظمیٰ کے خواب دیکھ رہے ہیں، آفتاب شیرپاو اور اسفندیار ولی خان کے بیٹے بھی الیکشن لڑ رہے ہیں، جبکہ فضل الرحمان کا بھائی اور بیٹا دونوں سیاست میں ہیں، ان پارٹیوں میں انکے رشتہ داروں کے علاوہ کوئی اوپر نہیں آسکتا اور خاندانی سیاست کی وجہ سےجمہوریت آگے نہیں بڑھ سکتی۔

تحریک انصاف کو حکومت کا موقع ملا تو اداروں کو مضبوط کریں گے کیونکہ ادارے مضبوط ہوں گے تو ملک ترقی کرے گا۔

متعلقہ خبریں