Daily Mashriq

ہالی ووڈ اداکار رامی کا مسلم مخالف فلموں میں اداکاری سے انکار

ہالی ووڈ اداکار رامی کا مسلم مخالف فلموں میں اداکاری سے انکار

نامور ہالی ووڈ اداکار رامی ملک نے مسلمانوں اور اسلام کے خلاف بننے والی فلموں میں اداکاری سے انکار کردیا۔نجی برطانوی اخبار کو دیئے گئے انٹرویو میں مصری نژاد امریکی اداکار رامی ملک کا کہنا تھا کہ وہ ایسی فلموں میں اداکاری نہیں کریں گے جو تعصب اور منفی سوچ کو بڑھاوا دیں۔

اپنے انٹرویو میں انکشاف کرتے ہوئے رامی کا کہنا تھا کہ انہوں نے ہالی ووڈ لیجنڈ ڈینیل کریگ کے مدِ مقابل فلم بانڈ25 میں پیشکش کو اس لیے ٹھکرا دیا کہ وہ تعصبانہ تھی۔ انہوں نے بتایا کہ فلم سائن کرنے سے پہلے کئی بار سوچا اور فلم کے ڈائریکٹر کیری جوجی فوکوناگا کو یہ کہہ کر فلم میں کام کرنے سے انکار کر دیا کہ اگر کردار کو عربی بولتے دکھایا گیا یا اسلام کو دہشت گردی کے ساتھ جوڑا گیا تو فلم نہیں کریں گے۔رامی ملک کا مزید کہنا تھا کہ ہم کسی بھی کردار کو اور مذہب کو دہشت گردی کے ساتھ نہیں جوڑ سکتے ہیں، ایسا بھی ممکن ہے کہ میرے اس کردار کی وجہ سے میرے گھر والوں کو کسی تنظیم کی جانب سے نقصان پہنچے۔انہوں نے کہا کہ میں نے واضح کیا ہے کہ میں مصری خاندان سے تعلق رکھتا ہوں، مصر میں جو لوگ بستے ہیں وہ میرے اپنے لوگ ہیں، میں مسلم مذہب مخالف کوئی کردار ادا نہیں کروں گا، لہذا اگر مجھے فلم میں کاسٹ کرنا ہے تو ان شرائط پر میں کام کرنے کے لیے تیار ہوں۔‘واضح رہے کہ امریکی اداکار رامی ملک 1981 ء میں لاس اینجلس میں پیدا ہوئے۔ اُن کے والدین اُن کی پیدائش سے 3 سال پہلے مصر سے ہجرت کرکے امریکا آگئے تھے۔

متعلقہ خبریں