Daily Mashriq

تنگی سے تیرہ سال پہلے اغوا بچی کو بالآخر ورثا نے ڈھونڈ لیا

تنگی سے تیرہ سال پہلے اغوا بچی کو بالآخر ورثا نے ڈھونڈ لیا

پشاور(ریاض احمد) چارسدہ کے علاقے تنگی سے تیرہ سال پہلے اغوا ہونے والی بچی کو بالآخر ورثا نے ڈھونڈ لیا۔سلمی نامی سات سالہ بچی کو تیرہ سال پہلے اسکی اپنی بھابی نے اغوا کرلیا تھا اور دھوکہ دہی سے اسے لے جاکر بردہ فروشوں کو 50ہزار روپے میں فروخت کردیا تھا یہ لوگ خواتین اور لڑکیوں کی خرید و فروخت کا کام کرتے تھے اور انھوں نے اسے خرید کر آگے چار لاکھ روپے میںخانہ بدوشوں کو بیچ دیاجنھوں نے اسے اپنے ایک لڑکے سے بیاہ دیا۔وہ خانہ بدوشوں کے ساتھ گھر گھر جاکر بھیک مانگتی تھی ایک دن سلمی بھیک مانگنے ایک گھر میں گئی جہاں خاتون خانہ نے اس سے پوچھا کہ وہ عام خانہ بدوشوں کے برعکس شکل سے پٹھان لگتی ہے جس پر اس نے اسے تمام ماجرا سنایا کہ اسے اغوا کرکے دو دفعہ فروخت کیا گیا ہے اس خاتون نے اپنے شوہر سے بات کی اور اس نے جاکر تنگی میں اسکے خاندان کو ڈھونڈ لیا۔

متعلقہ خبریں