Daily Mashriq

وزیراعظم کا تھرپارکر کیلئے بڑے صحت پیکج کا اعلان

وزیراعظم کا تھرپارکر کیلئے بڑے صحت پیکج کا اعلان

وزیراعظم عمران خان نے انصاف صحت کارڈ کے تحت آج تھرپارکر کیلئے بڑے صحت پیکج کا اعلان کیا جس کے تحت علاقے کے ایک لاکھ بارہ ہزار خاندانوں کو انصاف صحت کارڈ دئیے جائیںگے۔

چھاچھرو میں ایک جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ اس کارڈ کے تحت ہرمستحق شخص کو کسی بھی ہسپتال میں سات لاکھ بیس ہزار روپے تک کی طبی سہولتیں مل سکتی ہیں۔ وزیراعظم نے کہاکہ میرے اقتدار میں آنے کا سب سے بڑا مقصد غربت کاخاتمہ ہے ۔انہوں نے کہاکہ میں نے تھرپارکر کو اس لیے دورے کیلئے منتخب کیا ہے کہ یہ علاقہ پاکستان میں پسماندہ ترین ہے اور 75 فیصد مقامی لوگ خط غربت سے نیچے زندگی گزاررہے ہیں۔عمران خان نے کہاکہ بھارت میں اقلیتوں سے امتیازی سلوک اوران کا استحصال کیاجارہا ہے جبکہ حکومت پاکستان اقلیتوں بالخصوص ہندوئوں کو سہولتیں فراہم کررہی ہے ۔ وزیراعظم نے تھرپارکر کے عوام کیلئے صحت کی سہولتیں بڑھانے کی غرض سے دو موبائل ہسپتالوں اور چودہ ایمبولینس کی فراہمی کا اعلان کیا ۔انہوں نے کہاکہ تھرپارکرکوئلے اور تابنے سمیت معدنیات پیدا کرنے والا علاقہ ہے اوران کانوں کی آمدنی پہلے ان علاقوں پر خرچ کی جائیںگی۔عمران خان نے علاقے میں پانی کی قلت پرقابوپانے کیلئے پانی صاف کرنے کے ایک سو پلانٹس کی تنصیب کا اعلان کیا ہے انہوں نے کہاکہ بجلی ، سورج کی روشنی سے پیدا کی جائے گی انہوں نے کہاکہ وفاقی حکومت تھرپارکر اور سندھ کے دیگر پسماندہ علاقوں کی ترقی کیلئے سب کچھ کرے گی ۔ وزیراعظم نے کہاکہ حکومت کسی کو ہندوئوں یا کسی دوسری اقلیت کی دل آزاری کی اجازت نہیں دے گی انہوں نے کہاکہ پاکستان میں اقلیتوں کو یکساں حقوق حاصل ہیں ۔عمران خان نے کہاکہ نریندرمودی انتخابات میں ووٹ حاصل کرنے کیلئے اقلیتوں کے خلاف نفرت بڑھا رہے ہیں ۔اس سے پہلے چھاچھرومیں ایک اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ جب پاکستان امن کی اپیل کررہا ہے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی طبل جنگ بجارہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ پاکستان نے جذبہ خیرسگالی کے تحت بھارتی پائلٹ ابھی نندن کو واپس بھیجا لیکن بھارت نے پاکستانی باشندے شاکر اﷲ کی میت واپس بھیجی جسے بھارتی جیل میں قتل کردیاگیا تھا ۔شاہ محمود قریشی نے کہا کہ اگر بھارت نے امن اور دوستی کا ہاتھ بڑھایا تا ہم اسے بخوشی قبول کریںگے تاہم اگر وہ جارحیت کرناچاہتا ہے تو اس کا منہ توڑ جواب دیاجائے گا ۔انہوں نے کہاکہ پاکستان کے عوام اپنے وطن کاتحفظ کرناجانتے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ آج کا پاکستان 1971ء کا پاکستان نہیں بلکہ ایک مختلف پاکستان ہے جس کی قیادت عمران خان کررہے ہیں۔

متعلقہ خبریں