Daily Mashriq

امریکی کانگریس میں کشمیر سے متعلق بل پیش

امریکی کانگریس میں کشمیر سے متعلق بل پیش

امریکی ایوان نمائندگان میں مقبوضہ کشمیر سے متعلق بل پیش کر دیا گیا جس میں بھارت سے مقبوضہ کشمیر میں مواصلات کی بندش اور نظربندیوں کوختم کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

 بھارتی نژاد ڈیموکریٹ پرمیلا جے پال  اور ری پبلکن پارٹی کے اسٹیو واٹکنز ) کی جانب سے پیش کیے گئے بل میں کہا گیا ہے کہ بھارت مقبوضہ کشمیرمیں ذرائع ابلاغ پر پابندی اورکرفیو ختم کرکے سیاسی نظربندوں کوفوری رہا کرے۔

 بل میں گرفتاری اور مذہبی بنیادوں پرتشدد کا سلسلہ بند کرنے اور شہریوں کی مذہبی آزادی کا احترام کرنے کا بھی مطالبہ کیا گیا ہے۔ بھارت سے کہا گیا ہے کہ وہ کشمیریوں کو سیاسی سرگرمیوں اور اظہار رائے کی آزادی کی اجازت کے ساتھ انسانی حقوق مبصرین کو مقبوضہ کشمیر میں رسائی فراہم کرے ۔

 بھارت نے پانچ اگست سے مقبوضہ کشمیر میں مسلسل کرفیو نافذ کر رکھا ہے۔ چین اور امریکا سمیت کئی ممالک بھارت سے کشمیریوں پر جبری پابندیاں ختم کرنے کا مطالبہ کرچکے ہیں لیکن بھارت اپنی ہٹ دھرمی پرقائم ہے۔

 دوسری جانب حریت رہنما سید علی گیلانی نے دس دسمبر کو عالمی یوم انسانی حقوق کو یوم سیاہ کے طورپرمنانے کا اعلان کیا ہے۔

متعلقہ خبریں