Daily Mashriq

کشمیر کا معاملہ نو آبادیاتی تاریخ کا تنازعہ ہے جسے اقوام متحدہ کی قراردادوں کے تحت پرامن انداز میں حل کیا جانا چاہیے ،چین

کشمیر کا معاملہ نو آبادیاتی تاریخ کا تنازعہ ہے جسے اقوام متحدہ کی قراردادوں کے تحت پرامن انداز میں حل کیا جانا چاہیے ،چین

چین نے دوٹوک الفاظ میں کہا ہے کہ مسئلہ کشمیر نو آبادیاتی دور کا تنازعہ ہے جسے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق پر امن انداز میں حل کیا جانا چاہیے۔

چین کے سٹیٹ قونصلر اور وزیرخارجہ وانگ ژی نے یہ بات بیجنگ میں اپنے پاکستانی ہم منصب شاہ محمود قریشی سے ملاقات کے دوران کہی۔

انہوں نے مقبوضہ کشمیر میں بھارت کے یکطرفہ اقدامات سے پیدا ہونے والی صورتحال پر گہری تشویش کا اظہار کیا۔

دونوں وزرائے خارجہ نے اتفاق کیا کہ پاکستان اور چین بدلتی ہوئی صورتحال پر ایک دوسرے کے ساتھ قریبی رابطے اور مشاورت میں رہیں گے۔

دفترخارجہ کے بیان کے مطابق وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے Wang Yi سے ملاقات کے دوران انہیںبھارت کے حالیہ غیر قانونی اقدامات سے آگاہ کیا اور زور دیا کسی بھی یکطرفہ اقدام سے عالمی سطح پر تسلیم شدہ مقبوضہ جموں وکشمیر کی متنازعہ حیثیت کو تبدیل نہیں کیا جاسکتا۔

انہوں نے بھارت کے غیر قانونی اقدامات سے علاقائی امن وسلامتی کو درپیش شدید خطرات کو بھی اجاگر کیا۔

انہوں نے چینی وزیرخارجہ کو بھارتی سیکورٹی فورسز کی جانب سے مقبوضہ کشمیر کے مکمل محاصر اور موجودہ صورتحال سے پیدا ہونے والے انسانی بحران پر اپنی تشویش سے بھی آگاہ کیا۔

وزیرخارجہ نے کہا کہ بھارت اپنے جارحانہ عزائم کی تکمیل کیلئے مقبوضہ علاقے میں کوئی ڈرامہ رچا سکتا ہے اور دہشتگردی کا الزام پاکستان پر عائد کرنے کی مذموم کوشش کریگا۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کے تحت مقبوضہ جموں کشمیر ایک متنازعہ علاقہ ہے جس کا حتمی فیصلہ کشمیریوں کی امنگوں کے مطابق اقوام متحدہ کے زیر اہتمام آزادانہ اور منصفانہ استصواب رائے کے ذریعے کیا جائیگا۔

متعلقہ خبریں