Daily Mashriq


شوق کا کوئی مول نہیںہوتا

شوق کا کوئی مول نہیںہوتا

پچھلے چند دنوںسے ہمارے ہاتھ ایک نیا شغل لگا ہوا ہے۔ جی ہاں بڑا دلچسپ مشغلہ ! یعنی نت نئی خبروں کی تلاش ایک ایسی خبر جو اپنی ذات میں انوکھا پن لیے ہوئے ہو ! اگر آپ سیاسی خبروں یا سیاسی لیڈروں کی قلابازیوں یا پھلجھڑیوں کے حوالے سے سوچ رہے ہیں تو یقینا آپ کو مایوسی ہوگی۔جو سیاست دان ہر وقت گرگٹ کی طرح رنگ بدلتے رہتے ہیں ان کے حوالے سے لکھنا نہ لکھنا بے معنی سی بات ہے۔ یہ ذہن میں رہے کہ سیاستدان بننے کے لیے سب سے پہلی شرط یا بنیادی ڈگری یہی ہے کہ آپ ہرقسم کے الزامات برداشت کرنے ، ہر قسم کا طعنہ یا بہتان سننے کا حوصلہ رکھتے ہوں۔آج کل عمران خان کی شادی کے چرچے ہر زبان پر ہیںقسم قسم کے تبصرے سننے کو مل رہے ہیں ہم سے بھی دو چار مرتبہ پوچھا گیا کہ خان صاحب کی شادی کے حوالے سے آپ کیا کہتے ہیں! ہمیں یہ سوال ہی بڑا عجیب سا لگا یار ہر بندے کی اپنی ذاتی زندگی ہے خواہ وہ ایک شادی کرے یا چار؟ میاں بیوی راضی تو کیا کرے گا قاضی! جب دونوں طرف سے افہام و تفہیم کے ساتھ معاملات طے پا رہے ہیں تو کسی کو اس سے کیا لینا دینا ہے بس ہم تو یہ دعا ہی کرسکتے ہیں کہ عمران خان اپنی شادی کی نئی اننگ خوبصورتی کے ساتھ شاندار انداز میں کھیلیں خوب چوکے چھکے لگائیں کریز سے باہر نکل کر کھیلتے ہیں یا دفاعی پوزیشن اختیار کرتے ہیں اس کا انحصار ان کی اپنی صوابدید پر ہے۔ فی الحا ل خان صاحب کو اپنے حال پر چھوڑتے ہوئے ہم اپنے کالم کے موضوع کی طرف واپس آتے ہیںہم نے کالم کے آغاز میں دلچسپ خبروں کے حوالے سے بات کی تھی کل ہمارے ہاتھ جو خبر لگی وہ بڑی منفرد اور مختلف قسم کی ہے!ایک برطانوی جوڑے نے اپنا چار کمروں پر مشتمل خوبصورت اور پر آسائش گھر صرف اس لیے بیچ دیا ہے کہ وہ ورلڈ ٹور کی خواہش رکھتے ہیں دنیا دیکھنا چاہتے ہیں۔ ان کے پانچ بچے بھی ہیں وہ ان بچوں کی رفاقت میں گھاٹ گھاٹ کا پانی پینا چاہتے ہیں۔ عام طور پر لوگ ایک پر آسائش گھر کے متمنی ہوتے ہیں تاکہ زندگی کے دن اپنے ذاتی گھر میں اپنے بیوی بچوں کے ساتھ ہنسی خوشی گزار سکیں ! آپ ذرا سوچیئے! یہ کتنی عجیب بات ہے کہ آج کے ہنگامی دور میں جہاں قدم قدم پر حادثات سے واسطہ پڑنے کا امکان ہر وقت موجود رہتا ہے بندہ اپنا سجا سجایا گھر بیچ کر دنیا دیکھنے چل پڑے! ان سے جب پوچھا گیا کہ چھوٹے چھوٹے بچوں کی حفاظت بھی تو ایک اچھی خاصی درد سری ہے۔ اس کے بارے میں یقینا آپ لوگوں نے سوچا ہوگا ؟ ان کا کہنا ہے کہ ہماری شدید خواہش ہے کہ دنیا دیکھیں آنے والے دن نجانے کیسے ہوں ؟پھر ہمیں وقت ملے نہ ملے اگر ہم یہ ٹور نہ کرسکے تو ہمیں اس کا ہمیشہ افسوس رہے گا اگرچہ اس سیر سپاٹے پر دو برس سے زیادہ عرصہ لگے گا جس کی وجہ سے بچوں کی پڑھائی بھی یقینا متاثر ہوگی لیکن ہمارا خیال ہے کہ ہمارے بچے اس سفر کی وجہ سے سکول کی تعلیم سے زیادہ علم حاصل کر لیں گے۔ !دنیا کے جس حصے میں ہم رہتے ہیں وہاں اس قسم کے اقدام کا سوچا بھی نہیں جاسکتا یہ ان لوگوں کا اپنی ذات پر اعتماد ہے اور اس کی سب سے بڑی وجہ ان کے تحفظ کا احساس ہے وہ اچھی طرح جانتے ہیں کہ جو گھر انہوں نے بیچ دیا ہے اس طرح کا گھر دوبارہ بھی خریدا یا تعمیر کیا جاسکتا ہے کاروبار کامیابی سے چلتا رہے تو ان کے لیے کوئی مسئلہ نہیں ہے ! سفر کے حوالے سے ہمارے یہاں کہا جاتا ہے کہ سفر وسیلہ ظفر ہے لیکن ہمارے لیے یہ سب کچھ آسان نہیں ہوتا ہماری کمزور کرنسی جب ترقی یافتہ ممالک میں اپنا جلوہ دکھاتی ہے تو بیچاری کو جان کے لالے پڑ جاتے ہیں ایک مرتبہ ہمیں سعودی عرب میں لیدر کا ایک خوب صورت بیگ بہت پسند آیا ہم نے ضرورت یا عادت کے مطابق اپنا سیل فون نکالا تاکہ کیلکولیٹر پر حساب لگا کر دیکھیں کہ یہ بیگ پاکستانی کرنسی میں کتنے کا پڑتا ہے ؟ جب ہمارے کیلکولیٹر پر ہمارا مطلوبہ ہندسہ چمکا تو یقین کیجیے ہمارے ہاتھوں کے طوطے اڑ گئے اس بیگ کی قیمت 39ہزار روپے بنتی تھی! ہمارے چہرے پر بدحواسی کی علامات دیکھ کر سیلز مین مسکراتے ہوئے کہنے لگا جناب اگر آپ پاکستانی کرنسی کے حساب کتاب کرتے رہے تو کچھ بھی نہیں خرید پائیں گے ! ہم نے اس کی بات سے اتفاق کرتے ہوئے کہا کہ آپ درست فرما رہے ہیں لیکن ہم نے خریداری بھی تو اپنی جیب میں موجود یرقان زدہ کرنسی کے حساب سے کرنی ہے۔ ہمارے حکمرانوں کی مہربانیوں سے آج ہماری کرنسی کی شرح اس قدر گر چکی ہے کہ ہمارے لیے کوئی ڈھنگ کی چیز خریدنا ممکن ہی نہیں ہے!برطانوی جوڑا جب اپنی جیب میں موجود پائونڈز کے ساتھ دنیا کے سفر پر نکلے گا تو اسے اس قسم کی پریشانیوں کا سامنا نہیں کرنا پڑے گا ترقی یافتہ ممالک کے لوگ بھی اضافی مال و دولت کے ہوتے ہوئے اس قسم کے سفر کرتے ہیں لیکن اپنا شوق پورا کرنے کے لیے اپنا سجا سجایا گھر بیچ دینا ہمارے لیے یقینا ایک دلچسپ خبر ہے !

متعلقہ خبریں