Daily Mashriq


افغانستان کی صورت حال پاکستان پر براہ راست اثر انداز ہوتی ہے،تہمینہ جنجوعہ      

افغانستان کی صورت حال پاکستان پر براہ راست اثر انداز ہوتی ہے،تہمینہ جنجوعہ      

 ویب ڈِیسک:سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نے کہا ہے کہ پاکستان افغانستان کیساتھ تعلقات کو خصوصی اہمیت دیتے ہیں پرامن ہمسائیگی کی خواہش پاکستانی خارجہ پالیسی کا خاصہ ہے پاکستان میں امن افغانستان میں امن سے مشروط ہے ۔

اسلام آباد  میں منعقد افغانستان میں قیام امن کے سیمنار سے خطاب کرتے ہوئے سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نے کہاہے کہ پاکستان افغانستان کیساتھ تعلقات کو خصوصی اہمیت دیتے ہیں افغانستان کیساتھ تاریخی دیرینہ،مذہبی اورثقافی تعلقات ہیں سیاسی اور عسکری قیادت کے افغانستان کے حالیہ دورے ہماری پالیسی کے عکاس ہیں۔ انہوں نے کہا کہ  افغانستان پاکستان کے لئے انتہائی اہم ملک ہےافغانستان کی صورت حال پاکستان پربراہراست اثر اندازہوتی ہے ان کا کہنا تھاکہ پاکستان میں امن افغانستان میں امن سے مشروط ہے افغانستان کے چند علاقوں میں گورننس کا فقدان ہے۔تہمینہ جنجوعہ  نے کہا کہ افغانستان دہشت گردوں اور عسکریت پسندوں کی آماجگاہ بن چکا ہے افغانستان میں دہشتگردوں کی مخفوظ پناہ گاہیں ہیں ٹی ٹی پی ، جماعت الحرار کئی گروہ ان پناہ گاہوں کو استعمال کر رہے ہیں اورافغانستان میں داعش کا بڑھتا اثر علاقائی امن کے لیے خطرہ ہے رہے ہیں ان کا کہنا تھا ہماری خارجہ پالیسی میں پر امن ہمسائیگی کا عنصر اہم ہے افغان طلبہ کی ایک بڑی تعداد پاکستان میں زیر تعلیم ہے3 ہزار سے زائد وظائف افغان طلبہ کو دیے گئے افغان مہاجرین کو تعلیم, صحت اور اقتصادی سہولیات فراہم کر رہے ہیں  تہمینہ جنجوعہ کا مزید کہنا تھا کہ  جلد پاک افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کا اجلاس منعقد کیا جاے گا جس پر بات ہو رہی ہے انہوں نے کہا کہ ہمارے لئے اہم ہے کہ افغان مہاجرین عزت و احترام سے وطن واپس لوٹیں مستحکم افغانستان خطے کے استحکام کے لیے ضروری ہے افغان مسئلے کا حل عسکری نہیں سیاسی ہے شدت پسند گروہوں کو قومی دھارے میں لانے کی ضرورت ہے تہمینہ جنجوعہ نی مطالبہ کیا کہعالمی طاقتیں افغان مسئلے کے حل کے لیے کردار ادا کریں۔

متعلقہ خبریں