Daily Mashriq

حکومت امام مساجد کو گریڈ 14 تا 16 میں نوکریاں دے، فواد چوہدری

حکومت امام مساجد کو گریڈ 14 تا 16 میں نوکریاں دے، فواد چوہدری

وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کی جانب سے مطالبہ سامنے آیا ہے کہ حکومت مساجد میں موجود امام مساجد کو گریڈ 14 سے گریڈ 16 تک کی نوکریاں فراہم کرے۔

فواد چوہدری کی جانب سے مذکورہ مطالبہ سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ایک پیغام میں سامنے آیا۔

وفاقی وزیر نے تجویز پیش کی کہ ایک بہت چھوٹے گروپ کے لیے وسائل کو مختص کرنے کے بجائے ریاست کو چاہیے کہ مساجد میں موجود تمام امام مساجد کو نوکریاں دی جائیں جو گریڈ 14 سے 16 تک ہوں۔

اپنے ٹوئٹ میں فواد چوہدری نے یہ واضح نہیں کیا کہ پاکستان کی تمام مساجد کے امام کو امامت کرنے کی اجرت دی جائے یا کوئی دوسری نوکری فراہم کی جائے۔

اس کے علاوہ انہوں نے یہ بھی واضح نہیں کیا کہ مساجد میں موجود موذن اور خدمت گزار کو بھی یہ سہولت حاصل ہونی چاہیے یا نہیں؟

وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کا کہنا تھا کہ امام مساجد کو نوکریاں دینے سے ایک مخصوص ٹولے کی اجارہ داری بھی ختم ہوجائے گی اور ملک میں ایک نظم و ضبط قائم ہوگا۔

انہوں نے مزید کہا کہ اس سلسلے میں وزرائے اعلیٰ کو اپنی ذمہ داریاں پوری کرنی چاہیئں۔

ایک بہت چھوٹے گروپ کیلئے وسائل مختص کرنے کی بجائے ریاست کو چاہئے کہ تمام مساجد میں امام مساجد کو گریڈ 14 تا 16 نوکریاں دے، اس سے مخصوص ٹولے کی اجارہ داری بھی ختم ہو گی اور ایک ڈسپلن بھی آۓ گا، اس سلسلے میں صوبائ وزراء اعلیٰ کو اپنی ذمہ داریاں پوری کرنی چاھئیں۔

 واضح رہے کہ 5 مئی کو اپنے ٹوئٹ میں وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی نے چاند کی رویت سے متعلق بات کرتے ہوئے کہا تھا کہ پاکستان کی تاریخ میں پہلی مرتبہ حکومت نے آئندہ 10 سال تک اسلامی کلینڈرز کے تعین اور چاند کی رویت کے معاملے میں اختلافات کو دور کرنے کے لیے ایک کمیٹی قائم کردی۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ آئندہ دس برس کے لیے آنے والے اس کلینڈر سے ہر سال پیدا ہونے والا تنازع ختم ہوجائے گا۔

اس فیصلے کے بعد اپنے اوپر کی جانے والی تنقید کا جواب دیتے ہوئے فواد چوہدری نے کہا تھا کہ ملک کے مستقبل کا سفر ’مولویوں‘ نے نہیں بلکہ نوجوانوں نے طے کرنا ہے اور ٹیکنالوجی ہی قوم کو آگے لے جاسکتی ہے۔

متعلقہ خبریں