Daily Mashriq


قبضہ مافیا کاراج،16سوکنال پر مشتمل اخون آباد قبرستان2سو کنا ل رہ گیا

قبضہ مافیا کاراج،16سوکنال پر مشتمل اخون آباد قبرستان2سو کنا ل رہ گیا

پشاور ( سید شبیر شاہ ) اخون آباد قبرستان پر قبضہ مافیا کا راج برقرار ہے، 1600کنال پر مشتمل قبرستان صرف 200کنال تک محدود ہوگیا ،جبکہ ضلعی انتظامیہ کے قبضہ شدہ قبرستان واگزار کروانے کے وعدے دھرے کے دھرے رہ گئے مشرق فورم اظہار خیال کرتے ہوئے علاقہ مکینوں کا کہنا تھا کہ اخون آباد کے بیشتر علاقوں میں چھوٹے بڑے قبرستان موجود تھے جو کہ وقت حالات اور حکومتی نااہلی کی وجہ سے قبضہ مافیا کا شکار ہونے لگے۔ مکینوں نے کہاکہ اخون آباد قبرستان اور اس کے ساتھ ملحقہ رحمان بابا قبرستان 1600کنال پر مشتمل ایک بڑا قبرستان تھا جہاں پر پشاور کے لوگ اپنی میتوں کو دفن کرتے تھے لیکن اب یہاں صرف 200 کنال زمین پر قبرستان واقع ہے مزید میتیں دفنانے کے لئے جگہ ناپید ہوگئی جبکہ باقی بچی کچی زمین جس پر قبریں ہیں ان کو قبضہ مافیا ہڑپ کرنے کے لئے تیار بیٹھی ہے، مکینوں کا کہنا تھا کہ کوئی حکومتی ادارہ مسئلے کو حل کرنے اور قبرستانوں کا خیال رکھنے کے لئے تیار نہیں کیونکہ جب بھی محکمہ اوقاف کے پاس شکایت لے کر گئے تو وہ یہ بات کہہ کر ٹال دیتے ہیں کہ ہمارے پاس صرف ٹکڑا نمبر 4 کا قبرستان ہے جبکہ باقی قبرستان ان کی ذمہ داری نہیں جبکہ دوسری جانب ٹائون 1 اور ضلعی انتظامیہ بھی قبرستانوں کی ملکیت ماننے کو تیار نہیں جس کی وجہ سے تمام قبرستان قبضہ مافیا کے لئے لقمہ ثابت ہوئے اور دھڑا دھڑ قبضے کا شکار ہوتے گئے ۔ پروگرام میں شریک بزرگوں کا کہنا تھا کہ افسوس صرف اور صرف ضلعی انتظامیہ کی نااہلی پر ہورہا ہے کیونکہ قبضہ مافیا سے قبرستانوں کو واگزار کروانا ضلعی انتظامیہ کا کام ہے بزرگوں کا کہنا تھا کہ ضلعی انتظامیہ کے پاس کمشنرز کی فوج تو موجود ہے لیکن پھر بھی انھوں نے خاموشی اختیار کئے ہوئے ہیں

متعلقہ خبریں