Daily Mashriq


ماضی کے دو بڑے حریف  ممالک کے سربراہان کی تاریخی  ملاقات

ماضی کے دو بڑے حریف  ممالک کے سربراہان کی تاریخی  ملاقات

ویب ڈیسک:امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور شمالی کوریا کے رہنماءکم جونگ اُن کے درمیان   سنگا پور میں تاریخی ,ملاقات  ہوئی ایٹمی طور پر غیرمسلح  ہونے کے حوالے سے معاہدے پر دستخط۔

ایک دوسرے کیخلاف دھمکی آمیز جملے کھسنے والے ممالک کے سربراہان آخرکارایک دوسرے سے گلے مل گئے دونوں ملکوں کے درمیان  برف کی پہاڑ  67سال بعدپگھل گئی۔

سنگاپور میں منگل کو امریکی صدر ٹرمپ اور سربراہ شمالی کوریا کم جونگ ان کے درمیان ہونے والی ون آن ون ملاقات 45سے48منٹ تک جاری رہی۔ٹرمپ اور کم جونگ نے ملاقات سے پہلے خوشگوار موڈمیں مصافحہ  کیا اس دوران سیکیورٹی کےسخت انتطامات بھی کئے گئےسنگاپور میں ہونے والی ملاقات میں  امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور شمالی کورین صدر کم جونگ ان نے شمالی کوریا کے ایٹمی طور پر غیر مسلح ہونے سے متعلق معاہدے پر دستخط بھی کردیئے۔ اس تاریخی ملاقات کےدوران امریکی وزیرخارجہ جان بولٹن، چیف آف اسٹاف بھی شریک جب کہ کم جونگ ان کے دست راست کم یونگ چول، موجودہ سابق وزیر خارجہ بھی شریک رہے۔ ہزاروں صحافیوں بھی اسی موقع پر موجود تھے۔  صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے امریکی صدر دونلڈ ٹرمپ کا کہنا تھا کہ کم جونگ سے ملاقات اعزاز سمجھتا ہوں جوبہت اچھی رہی اسی بات چیت کا نتیجہ شاندار کامیابی کی صورت میں نکلے گا۔ انہوں نے کہا کہ شمالی کوریا کے ساتھ بہترین تعلقات کے لیے پرامید ہوں، توقع ہے کم جونگ ان سے تعلقات بہترین رہیں گے جب کہ مل کر کام کرکے ہی اہداف حاصل کر سکیں گے۔

دوسری جانب کم جونگ ان کا کہنا تھا کہ ملاقات کے لیے تمام خدشات اور قیاس آرائیوں کو مسترد کردیا، تلخ ماضی کو بھول کرامن کی نئی صبح کی امید کرتے ہیں۔

 

متعلقہ خبریں