Daily Mashriq

ایم کیو ایم نے وزارت چھوڑی ہے، حکومت نہیں، خواجہ اظہار الحسن

ایم کیو ایم نے وزارت چھوڑی ہے، حکومت نہیں، خواجہ اظہار الحسن

کراچی : ایم کیو ایم کے رہنما خواجہ اظہار الحسن نے کہا ہے کہ ایم کیو ایم نے وزارت چھوڑی ہےحکومت نہیں ،بلاول صاحب کی خواہش حکومت گرانا تھا،حکومت نہیں گرائیں گے۔

تفصیلات کے مطابق ایم کیو ایم کے رہنما خواجہ اظہار الحسن نےگفتگو کرتے ہوئے کہا کہ متحدہ قومی موومنٹ مایوس نہیں ہے، ایک وزارت ملی تھی وہ واپس کردی، فروغ نسیم ہمارے سینیٹر ہیں،ان سے کوئی مطالبہ نہیں۔

خواجہ اظہار کا کہنا تھا کہ ایم کیو ایم اب کابینہ سے باہر ہے،وزارت چھوڑی ہےحکومت نہیں، بلاول صاحب کی خواہش حکومت گرانا تھا،حکومت نہیں گرائیں گے، پہلے بھی کہہ چکے حکومت نہیں گرائیں گے نہ ارادہ ہے۔

ایم کیو ایم رہنما نے مزید کہا کہ ایم کیوایم پاکستان وفاقی حکومت کے ساتھ موجود ہیں، ایم کیو ایم حکومت گرانے کی کسی کوشش کا حصہ نہیں۔

یاد رہے گذشتہ روز ایم کیو ایم کے رہنما خالد مقبول صدیقی نے وفاقی کابینہ چھوڑنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ اب کابینہ میں بیٹھنا بے سود ہے، ہمارے پاس ایک ہی وزارت تھی، پی ٹی آئی نے دوسری وزارت کا وعدہ پورا نہیں کیا۔

ان کا کہنا تھا کہ ایم کیوایم پاکستان حکومت سے تعاون مسلسل جاری رکھے گی اور حکومت کا حصہ بھی ہوگی، اس کا کراچی کے شہریوں پر اچھا تاثر ہوگا، بہت سارے تحفظات کے باوجود ہم نے اسے بھی قبول کیا، ہم نے وزارتوں کیلئے کچھ نام دیے تھے جس میں میرا نام شامل نہیں تھا، نئی حکومت تھی اس وقت جمہوریت کے ساتھ تعاون کیا۔

بعد ازاں ایم کیو ایم پاکستان نے ایک اور سخت فیصلہ کرتے ہوئے وفاقی وزیر اسد عمر کی زیر صدارت کراچی بحالی کمیٹی کے اجلاس میں شرکت سے معذرت کر لی تھی۔

خیال رہے دسمبر 2019 میں ایم کیو ایم پاکستان نے چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو کی حکومت گرانے کی پیشکش مسترد کرتے ہوئے کہا تھا  کہ وفاقی حکومت سے اتحاد کراچی کے مفاد کی خاطر کیا، وفاقی حکومت سے اتحاد وزارتوں کے لیے نہیں ہے۔

متعلقہ خبریں