اپوزیشن نے ایوان میں وزیراعظم کیجانب سے نواز شریف کے متنازع بیان کی وضاحت مسترد کر دی

اپوزیشن نے ایوان میں وزیراعظم کیجانب سے نواز شریف کے متنازع بیان کی وضاحت مسترد کر دی

ویب ڈیسک: اپوزیشن نے میاں نوازشریف کے متنازع بیان پر وزیراعظم کی ایوان میں وضاحت کو مسترد کردیا۔

وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہاکہ نوازشریف کا بیان بھارتی میڈیا نے اپنے مقاصد کےلیے استعمال کیا اور یہاں پر اسے سیاسی مقاصد کے لیے پھیلایا جارہا ہے جب کہ نوازشریف کے بیان کی مس رپورٹنگ ہوئی ہے۔

قومی اسمبلی میں اپوزیشن رہنماؤں نے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کی وضاحت کو مسترد کردیا اور اپنی نشستوں پر کھڑے ہوکر احتجاج کیا۔

وزیراعظم کے بیان کے فوری بعد پی ٹی آئی کے شاہ محمود قریشی نے کہا کہ قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس بلایا گیا، نوازشریف نے مسترد کیوں کیا؟

اس پر وزیراعظم نے کہا کہ قومی سلامتی کا اجلاس بلانا ضروری تھا، جس میں ملکی سلامتی کا معاملہ پربات ہوئی۔

پیپلزپارٹی کے رہنما اعجاز جاکھرانی نے کہا کہ وزیراعظم کے ریمارکس پر ایوان سے واک آوٹ کرتے ہیں۔

اعجاز جاکھرانی کے بیان پر وزیراعظم نے کھڑے ہوکر وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ میں نے الزام نہیں لگایا بلکہ یہ کہا کہ جس کو تکلیف ہو رہی ہے وہ بات کر لے، روز روز کے تماشہ لگانا درست نہیں، ملک کو چلنے دیں۔

متعلقہ خبریں