Daily Mashriq

کشمیر میں بھارتی فوج کا نام نہاد سرچ آپریشن میں روبوٹ استعمال کرنے کا فیصلہ

کشمیر میں بھارتی فوج کا نام نہاد سرچ آپریشن میں روبوٹ استعمال کرنے کا فیصلہ

سری نگر: مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کی انتہا ہوگئی، وادی میں کرفیو 103ویں روز بھی برقرار ہے جبکہ بھارتی فوج نے نام نہاد سرچ آپریشن میں روبوٹ استعمال کرنے کا فیصلہ کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق آرٹیکل 370 کی منسوخی کے بعد مقبوضہ کشمیر میں کرفیو کا 103 واں روز ہے، وادی میں اسکول، کالجز اور تجارتی مراکز بند ہیں، مقبوضہ وادی میں نظام زندگی پوری طرح مفلوج ہوچکا ہے۔

کشمیر میڈیا سروس کا کہنا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں کرفیو کو 103روز ہوچکے ہیں، وادی میں جارحیت تاحال برقرار ہے، جبکہ بھارتی فوج نے نام نہادسرچ آپریشن میں روبوٹ استعمال کرنے کا فیصلہ کیا ہے، مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج محاصرے اور تلاشی کی کارروائیوں کے دوران روبوٹ استعمال کرے گی۔

غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق بھارتی فوج سینکڑوں روبوٹس آپریشن کے لیے استعمال کرے گی، روبوٹس میں سیڑھیوں پر چڑھنے، رکاوٹیں عبور کرنے اور دستی بم داغنے کی صلاحیت موجود ہوگی۔

مقبوضہ کشمیر میں لاک ڈاؤن کے باعث کشمیریوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔ کرفیو اور پابندیوں کے باعث اب تک مقامی معیشت کو ایک ارب ڈالر کا نقصان ہوچکا ہے جبکہ ہزاروں لوگ بے روزگار ہوچکے ہیں۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق کشمیری رہنماؤں، نوجوانوں سمیت بچے بھی جیلوں میں قید ہیں، 4 ماہ سے کشمیریوں کو نماز جمعہ مساجد میں ادا کرنے نہیں دی جا رہی۔

کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق بھارتی فورسز کے ہاتھوں مقبوضہ کشمیر میں اکتوبر میں 10 کشمیریوں کی شہادتیں ہوئیں۔ بھارتی فورسز کی پیلٹ گنز، شیلنگ اور فائرنگ سے 57 کشمیری زخمی ہوئے۔

متعلقہ خبریں