Daily Mashriq

آئی فون 6 دھماکے سے پھٹنے سے 11 سالہ بچی زخمی

آئی فون 6 دھماکے سے پھٹنے سے 11 سالہ بچی زخمی

ایک 11 سالہ بچی نے دعویٰ کیا ہے کہ اس کا آئی فون اس کے ہاتھوں میں پھٹ گیا۔

امریکی ریاست کیلیفورنیا کے علاقے بیکرفیلڈ سے تعلق رکھنے والی کائیلا راموس اپنی بہن کے کمرے میں آئی فون 6 پر کھیل رہی تھی جب اس نے ڈیوائس میں چنگاریاں نکلتی ہوئی دیکھیں۔

اے بی سی نیوز سے بات کرتے ہوئے بچی نے بتایا 'میں بیٹھی ہوئی تھی اور میرا فون میرے ہاتھ میں تھا، جب میں نے اس میں ہر جگہ سے چنگاریاں نکلتی ہوئی دیکھیں اور اسے کمبل پر پھینک دیا'۔

کائیلا راموس نے بتایا کہ اس دھماکے سے اس کا ہاتھ معمولی جل گیا مگر بہت زیادہ چوٹ نہیں آئی، تاہم آئی فون اور کمبل مکمل طور پر جل گئے۔

بچی کی ماں ماریہ اداتہ کا کہنا تھا کہ ایپل کی جانب سے واقعے کی تحقیقات ہورہی ہے اور کمپنی نے بیٹی کو نیا فون بھیجنے کا وعدہ کیا ہے۔

ماریہ کا کہنا تھا کہ اس دھماکے کی ممکنہ وجہ ڈیوائس کو بہت زیادہ چارج کرنا تھا۔

ایپل نے اس حوالے سے اے بی سی نیوز کو بھیجے گئے بیان میں کہا کہ ایک آئی فون کے بہت زیادہ گرم ہونے کی متعدد وجوہات ہوسکتی ہیں۔

بیان کے مطابق ان وجوہات میں تھرڈ پارٹی ایپل پراڈکٹس جیسے چارجنگ کیبل کا استعمال یا ایسی کمپنی سے آئی فون کی مرمت کرانا جو ایپل کی منظور کردہ نہ ہو۔

آئی فون میں اس طرح آگ لگنے یا پھٹنے کے واقعات بہت کم سامنے آتے ہیں۔

تاہم سام سنگ کو گلیکسی نوٹ 7 اسمارٹ فون میں اس مسئلے کا بڑے پیمانے پر سامنا ہوا تھا اور متعدد افراد نے ڈیوائسز میں آگ لگنے کی شکایت کی ، جس کے بعد دنیا بھر سے ڈیوائسز کو واپس طلب کیا گیا اور کمپنی کو اس کے نتیجے میں 5 ارب ڈالرز کا سامنا ہوا جبکہ ساکھ بھی بری طرح متاثر ہوئی۔

متعلقہ خبریں