Daily Mashriq

صوبائی احتساب کمیشن فعال آخرکب ہوگا؟

صوبائی احتساب کمیشن فعال آخرکب ہوگا؟

یہ امر سمجھ سے سراسر بالا تر ہے کہ خیبر پختونخواکی حکومت صوبائی احتساب کمیشن کے قیام سے لے کر اب تک اس حوالے سے جس تنقید اور تضحیک کا شکار رہی ہے اس کے باوجود سقم دور کرکے احتساب کمیشن کو فعال بنانے کے لئے ٹھوس اقدامات سے گریزاں ہے۔ خیبر پختونخوا حکومت نے جس چائو سے صوبائی احتساب کمیشن کے قیام کا اعلان کرکے صوبے میں حقیقی احتساب کی یقین دہانی کرائی تھی۔ اس سے بجا طور پر توقعات وابستہ کرلینا فطری امر تھا۔ اس کمیشن کے تحت جس قابل ذکر فرد کے خلاف کارروائی کی گئی اس کو سزا تو کیا ملتی آج اس کا جادو سر چڑھ کر بول رہا ہے جس سے نہ صرف صوبائی احتساب کمیشن کی حیثیت متاثر بلکہ متنازعہ ہوگئی ہے بلکہ خود تحریک انصاف کو سیاسی لحاظ سے بھی سبکی کا سامنا ہے۔ بہر حال اس صورتحال سے قطع نظر ہم اس منطق کو سمجھنے سے قاصر ہیں کہ اگر صوبائی حکومت نے احتساب کمیشن کو یونہی رکھنا تھا تو اس کے قیام اور بلند و بانگ دعوئوں کی کیا ضرورت تھی۔ آخر وہ کون سے امور مانع ہیں جو صوبائی حکومت کو صوبے میں احتساب کا خواب پورا کرنے نہیں دیتے اور صوبائی کمیشن کے لئے رولز مرتب کرکے فعال نہیں بنایا جاتا۔ صوبائی احتساب کمیشن کے ملازمین کنٹریکٹ کا عرصہ ایک ڈیڑھ ماہ ہی رہ گیا ہے اور نئے ملازمین کی بھرتی کا باب بند ہے ایسے میں اس کمیشن کا وجود ہی خطرے میں ہے۔ صوبائی حکومت اگر اپنی مدت اقتدار کے اس آخری سال میں بھی اس کمیشن کو مکمل اور فعال کمیشن بنا کر اور چند ایک بڑے بڑے بد عنوان عناصر کو کٹہرے میں لاکھڑاکرنے میں ناکام ہو جاتی ہے تو اسے نہ صرف اپنے منشور سے از خود انحراف کا طعنہ ملے گا بلکہ عوام کے لئے بھی یہ بڑی مایوس کن بات ہوگی۔

متعلقہ خبریں