Daily Mashriq

کراچی میں فائرنگ سے پی ایس پی رہنما جاں بحق

کراچی میں فائرنگ سے پی ایس پی رہنما جاں بحق

کراچی: پاک سرزمین پارٹی کے رہنما عبدالحبیب کو سخی حسن چورنگی پر فائرنگ کرکے قتل کردیا گیا۔

سخی حسن چورنگی سرینا موبائل مارکیٹ کے سامنے پیر کی شب تقریباً ساڑھے آٹھ سے پونے نو بجے کے درمیان موٹر سائیکل سوار ملزمان نے جیپ نمبر BH-9899 پر اندھا دھند فائرنگ کر دی جس کے نتیجے میں اس میں سوار پی ایس پی کے رہنما عبدالحبیب جاں بحق ہوگئے۔ فائرنگ سے موقع پر موجود افراد میں بھگدڑ مچ گئی اور خوف و ہراس پھیل گیا۔

جس مقام اور وقت پر جیپ کے سامنے آکر اس پر گولیاں برسائی گئیں وہاں پر نہ صرف ٹریفک کا ہجوم ہوتا ہے بلکہ موبائل مارکیٹ آنے والے خریداروں کی بھی بڑی تعداد کی وجہ سے لوگوں کا آنا جانا لگا رہتا ہے تاہم ٹارگٹ کلرز نے پولیس کی ناقص کارکردگی کا بھرپور فائدہ اٹھایا اور وہ اپنے ہدف کو نشانہ بنا کر باآسانی موقع فرار ہوگئے۔

فائرنگ کے بعد مقتول کی جیپ کے تمام دروزاے لاک ہونے کی وجہ سے جیپ کی ونڈ اسکرین توڑنی پڑی بعد ازاں لاش عباسی اسپتال منتقل کی گئی۔ عبدالحبیب ولد عبدالحمید گزشتہ انتخابات میں حلقہ پی ایس 122 کے امیدوار تھے۔ واقعے کے بعد پی ایس پی پاکستان کے رہنما سمیت دیگر عہدے داران و کارکنان کی بڑی تعداد عباسی اسپتال پہنچ گئی جہاں انھوں نے واقعے کی مذمت اور قاتلوں کی گرفتاری کا مطالبہ کیا۔

آئی جی سندھ نے ضلع وسطی میں سیاسی جماعت کے کارکنان کو نشانہ بنائے جانے کے تیسرے واقعے کا بھی نوٹس لیتے ہوئے ایس ایس پی سینٹرل سے رپورٹ طلب کرلی۔

قبل ازیں گزشتہ 23 دسمبر کو رضویہ سوسائٹی کے علاقے میں قائم پی ایس پی کے ٹاؤن آفس میں گھس اندھا دھند فائرنگ سے پی اپس پی کے 2 عہدے داروں کو ٹارگٹ کلنگ کا نشانہ بنایا گیا۔ رواں ماہ 11 فروری کو نیو کراچی کے علاقے سیکٹر الیون ڈی میں قائم یونین کونسل نمبر 6 کے دفتر پر ایس ایم جی اور نائن ایم ایم پستول سے مسلح ملزمان کی اندھا دھند فائرنگ سے ایم کیو ایم پاکستان کا ایک کارکن شکیل انصاری جاں بحق جبکہ دوسرا شدید زخمی ہوگیا تھا

متعلقہ خبریں