Daily Mashriq


ہمیں غیروں سے پہلے اپنوں کو خوش کرنا ہے، وزیرمملکت شہریار آفریدی

ہمیں غیروں سے پہلے اپنوں کو خوش کرنا ہے، وزیرمملکت شہریار آفریدی

ویب ڈیسک: ملکی  پالیسی کسی کے کہنے پر نہیں بلکہ پاکستان کے مفاد میں بنائی جائے گی،وزیرمملکت شہریار آفریدی۔

اسلام آباد میں قومی سلامتی، تعمیر اور ماس میڈیا کے موضوع پر سیمینار سے خطاب کے دوران وزیرمملکت برائے داخلہ شہریارآفریدی نے  کہا کہ ماضی میں قومی سلامتی کو ترجیح نہیں دی گئی لیکن ہمارے لیے سب سے پہلے پاکستان ہے، ہمارے 100 روزہ پلان میں قومی سلامتی بھی شامل ہے۔ ہم خطے کی سلامتی میں اہم شراکت دارہیں، دنیا ہمارے وجود کوتسلیم کرے۔

وزیرمملکت نے کہا کہ ہمارے فوجی جوان قربانیاں دے رہے ہیں لیکن لوگ سول ملٹری اختلافات پرلڑ رہے ہیں، ہم نے سول ملٹری رابطوں کو بہتر بنایا ہے، آج پاکستان میں کوئی سول ملٹری اختلاف نہیں ہے ہم سب متحد اورایک ہیں۔ وقت آچکا ہے کہ ہمیں گوروں کو خوش رکھنے کی روایتی سوچ کو بدلنا ہوگا، ہمیں غیرملکیوں کو نہیں بلکہ اپنوں کو خوش کرنا ہے، ایسی خارجہ پالیسی بنارہے ہیں جو ملکی مفادات کے عین مطابق ہوگی ۔ ہمیں اوورسیز پاکستانیوں کی کامیابیوں کو اجاگر کرنا ہوگا۔

 شہریار آفریدی نے کہا کہ گلگت بلتستان اور بلوچستان جب ترقی کریں گے تو ملک ترقی گا، ان کا کہنا تھا کہ بھارت نے افغانستان میں اپنے پنجے گاڑھ رکھے ہیں،  ایس پی طاہر خان داوڑ کی میت لینے کے لیے مجھے ڈھائی گھنٹے تک افغان سرحد پر کھڑے رہنا پڑا،انہوں نے مزید کہا کہ ہر اس شخص کو گلے لگانے کو تیار ہوں جس کی وفاداریاں پاکستان سے وابستہ ہوں۔

وزیر مملکت برائے داخلہ نے کہا ہمیں اپنے گھر کو ٹھیک کرنا ہے، ہم اسلام آباد اور پاکستان کو مافیا سے آزاد کرائیں گے، یہ تبدیلی نہیں ہے کہ بٹن دبایا اورتبدیلی نکل آئی، ہمیں وقت دیں۔ اللہ اس زمین کو آئی ایم ایف سے بچائے، ہم ایک ایک پائی ایک ایک آنے کا جواب دیں گے۔

شہریارآفریدی نے کہا کہ میڈیا کوقومی سلامتی کیلیے اہم کردارادا کرنا ہوگا، شکا گومیں سب سے زیادہ جرائم کی شرح ہے لیکن امریکی میڈیا شکاگومیں جرائم کو زیادہ شائع نہیں کرتا۔ 

متعلقہ خبریں