Daily Mashriq


 نوازشریف آمر بننا چاہتے ہیں اس لیے ان کی نام نہاد جمہوریت اورآمریت میں کوئی فرق نہیں،عمران خان

نوازشریف آمر بننا چاہتے ہیں اس لیے ان کی نام نہاد جمہوریت اورآمریت میں کوئی فرق نہیں،عمران خان

ویب ڈیسک: سپریم کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئےعمران خان نے  کہا کہ میں ذاتی دشمنی کی وجہ سے یہ سب کچھ نہیں کررہا ہوں، ساری اپوزیشن حکومت سے جواب مانگ رہی ہے، انہوں کہا ہم نے تو 4 سوال اُٹھائے تھے جب ان کا جواب نہیں‌ملا تو ہم نے عدالت آنے کافیصلہ کیا۔

عمران خان نے سوالیہ انداز میں کہا کہ مشرف کی آمریت اورنوازشریف کی نام نہاد جمہوریت میں کیا فرق ہے؟ نواز شریف جو کچھ کررہے ہیں ایسا آمریت میں ہی ہوتا ہے، وہ اداروں کو تباہ کر رہے ہیں ہم کہتے ہیں نوازشریف نے پارلیمنٹ اورسپریم کورٹ میں جھوٹ بولا ہے، اس بات پر مجھ پرکیس ‘ جہانگیر ترین کے خلاف تحقیقات ، شیخ رشید کو لال حویلی سے نکالنے کی کوششیں ہورہی ہیں.

چیئرمین تحریک انصاف نے کہا کہ اب ایک نئی صورتحال رونما ہوئی ہے ، آج ایک اور قطری خط آگیا ہے۔پاکستان کے عوام باشعور ہیں وہ قطری خط کی حقیقت جانتے ہیں‌۔ 

متعلقہ خبریں