Daily Mashriq

تیز ترین پاکستانی جان پارمل انتقال کرگئے

تیز ترین پاکستانی جان پارمل انتقال کرگئے

1965 سے 1974 تک تیز ترین پاکستانی ہونے کا اعزاز رکھنے والے جان پارمل کراچی میں انتقال کر گئے اور ان کے بیٹے نے انتقال کی تصدیق کردی ہے۔

ان کے بیٹے انتھونی پارمل دراصل ’ٹونی خان‘ کے نام سے ٹوئٹ کرتے ہیں اور انہوں نے بتایا کہ پارمل میں جون 2018 میں کینسر کی تشخیص ہوئی تھی۔

انہوں نے لکھا کہ پاکستان میں تیز ترین انسان جان پارمل ایک نہ ختم ہونے والی زندگی میں شامل ہو چکے ہیں، ان کی زندگی کی آخری ریس جیتی جا چکی ہے، خدا انہیں اپنی حفظ و امان میں رکھے۔

جان پارمل 1965 سے 1974 پاکستان کے بلاشک و بہ پہلے چیمپیئن تھے، وہ پہلی مرتبہ 1965 میں لاہور میں ہونے والے نیشنل گیمز میں اسپرنٹ چیمپیئن بنے تھے جہاں وہ دوسرے نمبر پر رہے تھے اور جہاں جرمن ایتھلیٹ گرٹ میٹز نے ریس جیتی تھی۔

1967 میں انہوں نے راولپنڈی میں 100میٹر کے تیز ترین انسان کا اعزاز برقرار رکھا تھا جس کے بعد 1968 میں ڈھاکا، 1970 میں کراچی، 1971 میں نوابشاہ اور پھر آخری مرتبہ 1973 میں لاہور میں یہ اعزاز برقرار رکھا۔انہوں نے سب سے بہترین کارکردگی 1969 میں دکھائی جب بون ایتھلیٹس کے درمیان مقابلے میں انہوں نے 10.4سیکنڈ میں 100میٹر کا فاصلہ طے کیا تھا۔

متعلقہ خبریں