چیف جسٹس پاکستان نے24گھنٹےمیں عاصمہ قتل کیس کی رپورٹ طلب کر لی

چیف جسٹس پاکستان نے24گھنٹےمیں عاصمہ قتل کیس کی رپورٹ طلب کر لی

ایب ڈیسک:چیف جسٹس پاکستان جسٹس ثاقب نثار نے کوہاٹ میں میڈیکل کی طالبہ عاصمہ کے قتل کیس کا ازخود نوٹس لیتے ہوئے آئی جی خیبر پختونخوا سے 24 گھنٹوں میں رپورٹ طلب کرلی۔

سپریم کورٹ میں مردان میں زیادتی کا شکار ہونے والی ننھی اسما قتل کیس کی سماعت ہوئی۔ سماعت کے دوران چیف جسٹس نے کوہاٹ میں شادی سے انکار پر قتل ہونے والی عاصمہ کیس کا ازخود نوٹس لیتے ہوئے آئی جی کے پی اور آرپی او سے 24 گھنٹوں میں رپورٹ طلب کرلی۔ 

سماعت کے دوران چیف جسٹس نےبرہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کوہاٹ میں بچی کو قتل کرکے بندہ بھاگ گیا، کے پی پولیس کیا کررہی ہے؟   خیبر پختونخوا میں تحقیقات کا کوئی میکنزم نہیں، بتایا جائے کہ ملزم بیرون ملک کیسے فرار ہوا؟ کے  پی  پولیس میں صلاحیت نہیں۔ چیف جسٹس نے استفسار کرتے ہوئے کہا کیا ملزم کا تعلق پی ٹی آئی سے ہے؟

متعلقہ خبریں